بھارتی ریاست اتر پردیش میں ایک خاتون پر اپنی ہی س وتی لی بیٹیوں کو ۔ کرنے کے الزام کے تحت گرفتار کیا گیا ہے . علی گڑھ سے تعلق رکھنے والی 19 سالہ بی ایس کی طالبہ نے پولیس کو دی گئی درخواست میں بتایا کہ اس کی سوتی لی ماں ہم پرس ت ہے اور ہم تین بہنوں کوج وش بڑھانے والی ادویات دے کر

کرتی ہے . متاثرہ کے مطابق اس کی والدہ کی موت کے بعد اس کے والد کی 45 سالہ خاتون سے فیس بک پر ملاقات ہوئی جس کے بعد دونوں نے 2019 میں ویلنٹائن ڈے پر شادی کرلی. ملزمہ نے خود کو نرس ظاہر کیا اور رات کے کھانے کے بعد خاص ٹیبلیٹ سب کو دینی شروع کردیں اور کہا

کہ یہ صحت کیلئے مفید ہیں. یہ ٹیبلیٹ لینے کے بعد لڑکی کے والد، دادا اور دادی گہری نیند میں چلے جاتے جبکہ تینوں بہنوں کاج وش بڑھ جاتا جس

کے بعد ان کی سوتی لی ماں انہیں ۔۔ دکھاتی اور انہیں ۔ کرتی. پولیس نے درخواست ملنے کے بعد ملزمہ سوتی لی ماں کو پکڑ  لیا ہے. پولیس تحقیقات میں انکشاف ہوا کہ خاتون کی یہ چوتھی شادی ہے، اس کی پہلی شادی 2005 میں دلی کے ایک شخص سے ہوئی تھی جس کی موت کے بارے میں ۔۔ کا ش بہ ظاہر کیا گیا اور اس کیس میں بھی یہ ج ی ل جاچکی ہے.

شیئر کریں